GW TV

Gujranwala Based News

نوشہرہ ورکاں

بجلی بل عوام کے لیے سہولت ختم ،اب بقایا جات ادا کرنے ہوں گے

نوشہرہ ورکاں : بجلی کے صارفین کے لیے وزیر اعظم پاکستان عمران خاں کی جانب سے کورونا لاک ڈاون کے دوران امدادی پیکج کے اعلان کے بعد رورل ایریاز کے 65فیصد گھریلو گیپکو صارفین نے تین ماہ سے بجلی کے بلوں کی ادائیگی نہ کر کے ھزاروں روپیے بل بقایا جات سر پر ڈال لیے، اور بقایا جات کی مد میں بجلی کے میٹروں کی ڈس کنکشن پالیسی پر عمل ھوتے دیکھ کر تمام صارفین اس ماہ حرکت میں آ گئے ھیں ، اور واپڈا پالیسی نہ ھونے کے باوجود عوام کی سہولت کے لیے بلوں کی اقساط کیے جانے کی سہولت دی گئی ھے اور ایکسین گیپکو ڈویژن نوشہرہ ورکاں محمد اعظم سومرو اور آر ۔ او آفس کا عملہ صارفین سے قسطوں کی مد میں ریکوری لینے اور تعاون کی فضا ساز گار بنائے ھوئے کورونا ایس او پیز کے تحت ڈیوٹیز انجام دے رھے ھیں،


یاد رھے کہ کورونا تھریڈ کے بعد لاک ڈاون کی صورت وزیر اعظم پاکستان عمران خاں کی جانب سے چھوٹی انڈسٹری اور چھوٹے دوکاندار کو کمرشل بلوں میں امدادی پیکج دیا گیا ھے جس کا پرنٹ کمرشل بل پر موجود ھے،
اور پیکج میں شامل کمرشل صارف کو حالیہ دنوں میں ملنے والے ماہ مئی کے صرف شدہ یونٹ کے بلوں کی اماونٹ منفی کر دی گئی ھے اور امدادی پیکج کی صورت ملنے والی رقم کا اکتوبر 2020 تک استعمال ھو سکے گا،
ایکسین گیپکو ڈویژن نوشہرہ ورکاں محمد اعظم سومرو نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ھے کہ گھریلو واپڈا صارفین کے لیے کسی قسم کا امدادی پیکج نہیں ھے اور تمام گھریلو صارفین بقایا جات میں شامل بلوں کی بروقت ادائیگی کریں اور زیادہ بھاری بل ھونے کی صورت سہولت کے لیے دو قسطیں کروا سکتے ھیں۔

LEAVE A RESPONSE

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

×